Sunday, 25 Oct, 11.10 am Hind Samachar

ہند سماچار
کوئٹہ میں حزب اختلاف پارٹیوں کا طاقت کا تیسرا مظاہرہ، فدائی حملےکا اندیشہ

کوئٹہ : پاکستان میں عمران خان حکومت کی مسلسل ناکامیوں کے خلاف گوجرانوالہ اور کراچی کے بعد پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) آج کوئٹہ میں طاقت کا مظاہرہ کر رہی ہے جسے ناکام بنانے کیلئے شہر میں دفعہ 144 فافذ کر دی گئی ہے۔ موٹرسائیکل پر ڈبل سواری کی پابندی ہو گی۔ باوجودیکہ مسلم لیگ نون کی رہنما مریم نواز اور مولانا فضل الرحمان یہاں پہنچ گئے ہیں۔

پی پی پی لیڈر بلاول بھٹو کا ویڈیو لنک خطاب بھی متوقع ہے۔ یہ اطلاع آن لائن میڈیا نے دی ہے۔ دوسری طرف قومی انسداد دہشتگردی مقتدرہنے کوئٹہ میں دہشت گردانہ حملے کی وارننگ جاری کرتے ہوئے پیشگی خبردارکیا ہے کہ ممنوعہ تحریک طالبان پاکستان ( ٹی ٹی پی) پشاور اور کوئٹہ میں دہشت گردی مچانے کا ارادہ رکھتی ہے اور دہشتگردوں نے بم اور فدائی دھماکوں سے سیاسی اور مذہبی قیادت کو نشانہ بنانے کا منصوبہ بنارکھا ہے۔

اس وارننگ کے باوجود ایک سے زیادہ قو می اور علاقائی پارٹیوں کے محاذ پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ کی جانب سے آج کوئٹہ میں حکومت مخالف تیسرا احتجاجی مظاہرہ کیا جا رہا ہے جس کا اہتمام ایوب سٹیڈیم میں کیا گیا ہے۔ جانکار حلقوں کے مطابق حکومت مخالف احتجاج میں تیزی آنے لگی ہے۔ مشترکہ احتجاجی پلیٹ فارم سے پی ڈی ایم کے صدرمولانا فضل الرحمن اور مسلم لیگ ن کی سینئر نائب صدر مریم نواز، اے این پی کے سربراہ اسفند یار ولی، سابق وزیراعلیٰ بلوچستان عبد المالک بلوچ سمیت دیگر رہنما خطاب کریں گے۔ بلاول بھٹو کا ویڈیو لنک کے ذریعے جلسے سے خطاب کا امکان ہے۔دوسری طرف بلوچستان حکومت نے پی ڈی ایم کے جلسے کے موقع پر شہر میں دفعہ 144نافذ کر دی، موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی اور اسپتالوں میں ایمرجنسی لگادی گئی ہے۔

Dailyhunt
Disclaimer: This story is auto-aggregated by a computer program and has not been created or edited by Dailyhunt. Publisher: Hind Samachar Urdu
Top